بیلہ ،احتجاجی ریلی پر حملے کے خلاف نیشنل پارٹی کا دھرنا

30 جون ، 2022

بیلہ ( نامہ نگار ) ساحلی علاقے ڈام بندر میں نیشنل پارٹی کے زیر اہتمام احتجاجی ریلی پر حملے اور کارکنوں کے زخمی ہونے پر پارٹی ورکروں نے پولیس تھانہ وندر کے گیٹ پر صوبائی نائب صدر خورشید علی رند ، نظام رند اور کامریڈ سلیم بلوچ کی قیادت میں دھرنا دے دیا۔ دھرنے کے شرکاء کا مطالبہ تھا کہ پولیس فوری طور پر حملہ آور ٹرالر مافیا کے غنڈوں اور اس کے پشتیبان محکمہ فشریز کے اہلکاروں کو گرفتار کرے ورنہ احتجاج کو ضلعی سطح پر توسیع دے کر مین قومی شاہراہ بھی بلاک کر دی جائیگی۔ بعد ازاں اوتھل میں پارٹی صدر ایم رمضان شاہین اور تاریخی شہر بیلہ میں پارٹی کے سینئر رہنماءعبدالواحد بلوچ کی قیادت میں بھی احتجاجی ریلیاں نکالی گئیں۔ ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے نیشنل پارٹی کے پرامن احتجاج پر حملہ کرنے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ٹرالر مافیا فشریز ڈیپارٹمنٹ کی ملی بھگت سے ممنوعہ جال استعمال کرکے آبی حیات کی نسل کشی کے درپے ہیں جسے کسی صورت اس بات کی اجازت نہیں دی جا سکتی۔ انہوں نے کہا کہ غریب ماہی گیروں کے حقوق سے دستبردار ہرگز نہیں ہوں گے اور آبی حیات کے تحفظ کے لیے ہر فورم پر آواز اٹھائی جائے گی ۔