سپریم کورٹ پریکٹس بل انصاف کی یکساں فراہمی یقینی بنانا ہے:علی حیدر گیلانی

19 اپریل ، 2023

کبیروالا ( نامہ نگار) کسی سے کوئی اختیار نہیں چھینا جارہا، سپریم کورٹ پریکٹس بل کا مقصد انصاف کی یکساں فراہمی یقینی بنانا ہے، عدالتی سزاؤں کے بعد کسی پاکستانی کو اپیل کے حق سے محروم نہیں رکھاجا سکتا، سپریم کورٹ آئین سازی پر پارلیمان کو ڈکٹیٹ نہیں کر سکتی،الیکشن کے انعقاد کے لئے غیر آئینی اقداما ت پر مزاحمت کریں گے، آئین سازی پارلیمان اور انتخابات کروانا الیکشن کمیشن کا آئینی اختیار ہے، پیپلز پارٹی نے آئین بنایا تحفظ کی ذمہ داری بھی پوری کرے گی، عمران نیازی کو جبری اقتدار دلانے کی سازشیں کامیاب نہیں ہوں گی، طاقت کے نشہ میں اداروں کو بغاوت پر اکسانا کونسی حب الوطنی ہے، آئی ایم ایف اور عمران نیازی کے حواری حکومت کو بلیک میل کرنے میں مصروف ہیں، انصاف کے دہرے معیار ختم کئے بغیر ملک عدم استحکام کا شکار بنا رہے گا، شرائط پر مذاکرات نہیں کئے جاسکتے،پیپلز پارٹی ڈائیلاگ پر یقین رکھتی ہے،ان خیالا ت کا اظہار سابق صوبائی وزیر مخدوم سید علی حیدر گیلانی نے صوبائی رہنما ء ٹکٹ ہولڈر PP204ملک ناہیدعبا س جٹ دھرالہ سے ملاقات کے دوران کیا، انہوں نے کہا کہ عدالتیں سزائیں سنانے کے بعد کسی بھی شخص کو اپیل کے حق سے محروم نہیں رکھ سکتیں، انہوں نے کہا کہ براہ راست گورنر اسٹیٹ بینک کوفنڈذ جاری کرنے کا حکم حکومتی اختیارات میں مداخلت اورآئین کی خلاف ورزی ہے، تمام سیاسی جماعتیں ایک ہی روزانتخاب کرانے پر متفق ہیں مگر لاڈلے کی بےجا ضدپر اسے پنجاب قبل از وقت سونپنے کی کو ششیں کسی صورت قبول نہیں کی جائیگی۔