انفارمیشن ایکٹ:پنجاب میں ایک ارب 60 کروڑ کی اضافی وصولیاں

25 ستمبر ، 2023

لاہور(آصف محمود بٹ ) پنجاب انفارمیشن کمیشن میں معلومات تک رسائی کے قانون2013 کے تحت دائر درخواستوں کے ذریعے معلومات لے کر اعلیٰ عدالتوں میں کیسز فائل کرنے اور اس حوالے سے جاری احکامات کے نتیجے میں پنجاب حکومت کو ایک ارب 60 کروڑ کی اضافی وصولیاں ہوئیں۔ ذرائع نے ’’جنگ‘‘ کو بتایا کہ سول سوسائٹی کی طرف سے شفافیت اور معلومات تک رسائی کے قانون کے تحت دائر درخواستو ں پر عملدرآمد کے بعد مختلف محکموں سے سرکاری زمینوں پر ناجائز قبضوں کے خاتمے کی مد میں نہ صرف وصولیاں ہو ئیں بلکہ حکومت کی طرف سے قانونی طور پر الاٹمنٹ کا نیا قانون بھی 2019 میں بنوایا گیا۔پنجاب انفارمیشن کمیشن نے معلومات تک رسائی کے قانون 2013کے تحت دائر ایک درخواست میں پنجاب بورڈ آف ریونیو کو حکم دیا کہ پنجاب کے تمام اضلاع کے ڈپٹی کمشنروں سے سرکاری ملکیت کی زمینوں( نزول لینڈز) کی تفصیلات منگوائی جائیں تاکہ پتہ چل سکے کہ حکومت کی ملکیتی اربوں کی زمینیں سالانہ چند ہزار روپوں میں کن کو دی گئی ہیں۔ کمیشن نے اپنے حکم نامے میں کہا کہ سپریم کورٹ کی لیز کے حوالے سے اوپن آکشن پالیسی احکامات پر بھی عملدرآمد کروایا جائے۔