حکومت ایک ارب روپے سبسڈی ادا کریگی، جان اچکزئی ،زمینداروں کا دھرنا ختم

13 اکتوبر ، 2023

کوئٹہ (خ ن)نگران صوبائی وزیر اطلاعات جان اچکزئی نے کہا ہے کہ عوام کے مسائل کے حل کیلئے کوشاں ہیں، عوام کو بنیادی سہولیات کی فراہمی حکومت کی زمہ داری ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ریڈ زون میں دئیے گئے دھرنے کے دوران کیا۔انہوں نے زمیندار ایکشن کمیٹی کی جانب سے دئیے گئے دھرنے کو کامیاب مذاکرات کے بعد ختم کروایا۔ انہوں نے یقین دلایا کہ زمیندار ایکشن کمیٹی کے تحفظات کے حل کیلئے اپنا بھرپور کردار ادا کریں گے اور متعلقہ حکام سے مسائل کے موثر حل کے لئے لائحہ عمل بنانے کا بھی کہا گیا ہے تاکہ شرکاء کی جانب سے پیش کیے گئے تحفظات کا موثر حل نکالا جا سکے۔درایں اثناء نگران وزیر اطلاعات جان اچکزئی نے کہاکہ حکومت بلوچستان اور زمیندار کسان اتحاد پاکستان کے درمیان مذاکرات کامیاب ہوگئے ۔ زمینداروں نے 18 اکتوبر کو ہونے والے احتجاج ختم کرنے کا اعلان کیا ہے۔ حکومت بلوچستان زمینداروں کے زمے بجلی کے بقایاجات کی مد میں ایک ارب روپے سبسڈی ادا کرے گی تاکہ زمینداروں کی بجلی بحال ہوسکے۔زمیندار بجلی کے بلوں اور بقایاجات کی ادائیگی کو یقینی بنائے تاکہ زمینداروں کوآٹھ گھنٹے بجلی کی فراہمی کو ممکن بنایا جاسکے اس کے علاؤہ تمام غیر قانونی ٹیوب ویلوں کے خلاف سخت قانونی کارروائی عمل میں لاتے ہوئے انہیں ختم کیا جائے گا۔قانونی ٹیوب ویلوں کو ریگولرائزڈ کرکے میٹر پر منتقل کیے جانے کے لیے اقدامات اٹھائے جائیں گے تاکہ مستقبل میں کوئی مشکلات درپیش نہ ہو۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے کمشنر آفس کوئٹہ میں زمیندار کسان اتحاد پاکستان سے بجلی کی بحالی اور بقایاجات کی ادائیگی سمیت دیگر معاملات کے حوالے سے اجلاس کی صدارت میں کیا۔اس موقع پر کمشنر کوئٹہ ڈویژن حمزہ شفقات ،ڈپٹی کمشنر کوئٹہ لیفٹننٹ(ر) سعد بن اسد، زمیندار ایکشن کمیٹی کے عہدیداران نصیرشاہوانی ،حاجی عبدالرحمن بازئی اور دیگر موجود تھے۔نگران صوبائی وزیر نے کہاکہ صوبائی حکومت صوبے کے زمینداروں کو زیادہ سے زیادہ ریلیف فراہم کرنے کے لیے ہرممکن اقدامات کررہی ہے۔کیونکہ سیلاب کی وجہ سے زمینداروں کی مشکلات اور مسائل کا ادراک ہے۔اس سلسلے میں بجلی کی بلاتعطل فراہمی کو یقینی بنایا جائے گا۔انہوں نے کہاکہ صوبے میں کیسکو کے 415ارب روپے کے واجبات زمینداروں پر ہیں جن کی وصولی کے لیے غیر قانونی ٹیوب ویلوں کے خلاف کارروائیوں اور واجبات کی ادائیگیوں کو یقینی بنایا جائے گا۔